Breaking News

مینار پاکستان گراﺅنڈ میں ٹک ٹاکر کیساتھ درندگی کا دوسرا رخ بھی سامنے آگیا، سوشل میڈیا پر ہنگامہ

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) یوم آزادی کے موقع پر مینارپاکستان پر ایک ٹک ٹاکر لڑکی کے ساتھ جو واقعہ پیش آیا اس نے پورے ملک کو ہلا کر رکھ دیا اور قوم یک زبان ہو کر ان درندوں کو کیفر کردار تک پہنچانے کا مطالبہ کرنے لگی تاہم اب اس معاملے کا ایک اور پہلو بھی بے نقاب ہونا شروع ہو گیا ہے۔

 نجی ٹی وی چینل 24نیوز کے مطابق معاملے کا دوسرا پہلو یہ ہے کہ یہ سارا واقعہ ایک منصوبہ بندی کے تحت اس ٹک ٹاکر لڑکی اور اس کے ساتھیوں نے خود بپا کیا اور اس کی وجہ سستی شہرت حاصل کرنا اور ٹک ٹاک پر فالوورز کی تعداد بڑھانا تھا۔انٹرنیٹ صارفین کی طرف سے اس عائشہ اکرم نامی لڑکی کی ٹک ٹاک ویڈیوز ثبوت کے طور پر پیش کی جا رہی ہیں۔ ایک ویڈیو اس واقعے سے ایک دن قبل پوسٹ کی گئی جس میں عائشہ لوگوں کو بتا رہی ہوتی ہے کہ وہ کل گریٹر اقبال پارک جا رہی ہے، جس جس نے اس کے ساتھ سیلفی لینی ہے یا ملنا ہے، وہ کل گریٹر اقبال پارک پہنچ جائے۔ اب یہ ویڈیو عائشہ کے ٹک ٹاک اکاﺅنٹ سے ڈیلیٹ ہو چکی ہے۔ اس کے علاوہ گریٹراقبال پارک میں واقعے سے قبل بنائی گئی کچھ ویڈیوز بھی سامنے آ رہی ہیں جن سے شبہ ہوتا ہے کہ یہ سب کچھ عائشہ اور اس کے ساتھ ریمبو کی منصوبہ بندی کے تحت ہوا۔ سوشل میڈیا صارفین بھی اس واقعے پر کچھ سوالات اٹھا رہے ہیں، جن کے جوابات بہرحال ملنے چاہئیں۔ وینا ملک نے اپنے ٹوئٹر اکاﺅنٹ پر کہا ہے کہ ”ایک لڑکی پر 400مردوں نے حملہ کیا اور اسے خراش تک نہ آئی۔ بہت برا سکرپٹ تھا یہ۔“اویس مغل نامی ٹوئٹر صارف نے لکھا ہے کہ ”روزانہ ہزاروں لڑکیاں مینار پاکستان جاتی ہیں اور کبھی ایسا واقعہ پیش نہیں آیا۔ جب اس قماش کی لڑکی 400مردوں میں جا گھستی ہے تو ایسا واقعہ پیش آتا ہے۔ “ سوشل میڈیا صارفین اس کیس میں عائشہ اور اس کے ساتھ ریمبو کو بھی شامل تفتیش کرنے اور اس پہلو سے بھی تحقیقات کرنے کا مطالبہ کر رہے ہیں۔

About admin

Check Also

عثمان بزدار کی چھٹی؟عمران خان کے پاس متبادل آپشن کون؟ بڑی خبر

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) وزیر اعظم عمران خان کی گجرات کے چودھری برادران سے گزشتہ دوماہ …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *