Breaking News

”نور مقدم مجھے کس کام پر مجبور کر رہی تھی؟ ملزم ظاہر جعفر نے تہلکہ خیز حقیقت بیان کر دی“

اسلام آباد (نیوز ڈیسک ) سینئر صحافی رؤف کلاسرا نے ملزم ظاہر جعفر کے پولیس کو دئیے گئے بیانات سے متعلق بڑا دعویٰ کیا ہے۔انہوں نے کہا کہ ظاہر جعفر گرفتاری کے بعد پولیس مختلف بیانات دیتا رہا۔وہ پولیس کے سامنے بار بار کہتا رہا کہ میں امریکی شہری ہوں آپ مجھ سے سوال نہیں پوچھ سکتے ، اگر آپ کو کچھ پوچھنا ہے تو وکیل سے پوچھیں۔

لیکن پاکستان میں پولیس اس طرح کی باتیں برداشت نہیں کرتی خاص طور پر اتنے ہائی پروفائل کیس میں تو بالکل بھی نہیں۔ پولیس نے ظاہر جعفر کو کہا کہ بے شک آپ امریکی شہری ہوں گے لیکن اس کا ہرگز یہ مطلب نہیں کہ آپ سوالات کے جوابات نہ دیں۔جس کے بعد ظاہر جعفر نے پولیس کو سوالوں کے جواب دئیے۔ظاہر جعفر پولیس کو بتاتے ہیں کہ میں نے 19 جولائی کو امریکا چلے جانا تھا لیکن نور مقدم نے فون کیا اور ملنے پر اصرار کیا جس کے بعد میں نے اپنی سیٹ کینسل کر دی،نور مقدم مجھے شادی کے لیے مجبور کر رہی تھی لیکن میری ایسی کوئی سوچ نہیں تھی۔نور شادی کے لیے ذہنی طور پر تیار تھی تاہم میرے ذہن میں ایسا کچھ نہیں تھا، ہماری فیملی بہت بڑی ہے اور ہمارے خاندانوں کے سٹیٹس میں بھی فرق تھا۔حالانکہ نور کے والد بھی سابق سفیر رہ چکے ہیں اور نور خود بھی بیرون ملک تعلیم حاصل کرتی رہی۔ جبکہ سابق صدر مملکت  ممنون حسین علالت کے باعث 81 برس کی عمر میں انتقال کرگئے۔سابق صدر مملک کے بیٹے ارسلان ممنون کے مطابق ممنون حسین دو ہفتوں سے نجی اسپتال میں زیر علاج تھے۔ وہ کینسر کے عارضے میں مبتلا تھے۔ممنون حسین نے سوگواروں میں بیوہ اور تین بیٹے چھوڑے ہیں۔ ممنون حسین 23 دسمبر 1940 کو آگرہ شہر میں پیدا ہوئے، وہ پاکستان مسلم لیگ ن کے سینیئر رہنماؤں میں سے ایک تھے اور 2013 سے 2018 تک صدر مملکت کے عہدے پر فائز رہے۔

About admin

Check Also

شادی شدہ لڑکی اور پروفیسر کا حیران کردینےوالا واقعہ

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) پروفیسر نے ایک شادی شدہ لڑکی کو کھڑا کیااور کہا کہ آپ …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *