Breaking News

16کروڑ کا ٹیکہ لگنے کے باوجود جینیاتی بیماری میں مبتلا 13ماہ کی بچی چل بسی، کھیلتے ہوئے اچانک بچی کی حالت کیسی ہوگئی تھی؟والدین بیٹی کی موت پر غم سے نڈھال

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) مغربی بھارتی ریاست مہاراشٹر کی 13 ماہ کی بچی ویدیکا سورابھا شنڈے جو کہ ایک شاذ و نادر ہی لاحق ہونے والی بیماری میں مبتلا ہونے کے باعث جاں بلب کیفیت میں مبتلا تھی۔پونا کے دینا ناتھ منگیشکر اسپتال میں انتقال کرگئی۔ واضح رہے کہ اس کی بیماری کی نوعیت کے باعث دنیا بھر سے اس کی مدد بھی کی گئی۔

اسے دنیا کا مہنگا ترین انجکشن زولگنسما بھی گزشتہ ماہ لگایا گیا تھا یاد رہے کہ اس انجکشن کی قیمت سولہ کروڑ روپے ہے اور یہ رقم مختلف کراوڈ فنڈنگ کے ذریعے جمع کی گئی تھی مگر وہ ایک جینیاتی بیماری، جسے اسپائنل مسکیولر اٹروفی کہتے ہیںبہت کم لوگوں کوایسی بیماری لاحق ہوتی ہے، اس سے جانبر نہ ہوسکی اور چل بسی۔ بچی کے والد کے مطابق وہ گزشتہ شام کھیل رہی تھی کہ اچانک اسے سانس لینے میں مشکل پیش آنے لگی، جس پر ہم فوری طور پر اسپتال پہنچے، جب اسکی حالت سنبھلی تو پھر ہم اسے دینا ناتھ منگیشکر اسپتال لے گئے جہاں اسے فوری طور پر وینٹی لیٹر پر لے جایا گیا، اس موقع پر ڈاکٹروں نے پوری کوشش کی لیکن وہ جانبر نہ ہوسکی۔ دوسری جانب سپریم کورٹ کے جج جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے عوام سے اپیل کی ہے کہ کورونا ایس او پیز پر عملدرآمد کریں،ماسک پہنیں اور سماجی فاصلے کو برقرار رکھیں۔ جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے قائداعظم انٹرنیشنل ہسپتال سے عوام کیلئے پیغام میں کہاکہ قائد اعظم انٹرنیشنل ہسپتال میں میرا بہترین علاج ہورہا ہے،پوری قوم کا شکرگزار ہوں جس نے میری اور اہلیہ کی صحتیابی کیلئے دعا کی۔ انہوں نے کہاکہ ویکسین لگوانے کے باوجود مجھے ہسپتال داخل ہونا پڑا۔ انہوں نے کہاکہ عوام سے اپیل کرتا ہوں کہ کورونا ایس او پیز پر عملدرآمد کریں،ماسک پہنیں اور سماجی فاصلے کو برقرار رکھیں۔

About admin

Check Also

پہلا اسلامی ملک جس نے افغان طالبان کی حکومت تسلیم کرلیا۔۔بڑا اعلان

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) پہلا اسلامی ملک جس نے افغان طالبان کی حکومت تسلیم کرنے کا …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *