Breaking News

برطانوی عدالت کا براڈ شیٹ کے حق میں نیا فیصلہ! 1 ملین پاؤنڈ ادا نہ کرنے کی صورت میں پاکستان کے کون کونسے اثاثے ضبط کر لیے جائیں گے؟ پاکستان کو بھاری مالی نقصان کا سامنا

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) برطانوی عدالت کا براڈ شیٹ کے حق میں نیا فیصلہ، پاکستان کو بھاری مالی نقصان اُٹھانا پڑ گیا۔ تفصیلات کے مطابق برطانوی عدالت نے حکومت پاکستان کی جانب سے براڈشیٹ کو 1 ملین پاؤنڈ کی ادائیگی نہ کرنے پر پاکستان کے برطانیہ میں مزید اثاثے ضبط کرنے کا حکم دے دیا ہے۔ ذرائع نے بتایا ہے کہ برطانوی عدالت نے نیب کیخلاف براڈ شیٹ کے حق میں نیا فیصلہ دیدیا۔

برطانوی فرم براڈ شیٹ نے ایک ملین پاؤنڈ کی بقایا رقم کے حصول کے لیے برطانیہ کی عدالت سے رابطہ کیا تھا جس پر عدالت نے براڈ شیٹ کے حق میں نیا حکم دے دیا ہے۔ اس حوالے سے برڈاشیٹ کے سربراہ کاوے موسوی نے کہا ہے کہ حکومت پاکستان نے ادائیگی نہ کرکے مزید اثاثے ضبط کرنے پر مجبور کیا ہے۔انہوں نے انکشاف کیا کہ نیب چیئرمین اور مشیر احتساب شہزاد اقبال کی نا اہلی کی وجہ سے پاکستان کو مزید مالی نقصان اٹھانا پڑے گا۔برطانوی عدالت نے براڈ شیٹ کے حق میں نیا حکم دیتے ہوئے فرم کو فریزنگ آرڈر (اثاثے منجمد کرنے کا حکم نامہ) براہ راست قومی احتساب بیورو (نیب) اور اٹارنی جنرل آف پاکستان کے دفاتر پہنچانے کی اجازت دے دی۔برطانیہ میں نیب کی نمائندگی کرنے والے وکلا اولین اینڈ اووری 2 ماہ سے براڈ شیٹ کو کوئی جواب نہیں دے رہے تھےجس کے سبب براڈ شیٹ کیس کے حوالے سے برطانیہ میں پاکستان کی قانونی نمائندگی نہیں رہی تھی۔خیال رہےکہ برطانوی ہائی کورٹ پہلے ہی یو بی ایل میں پاکستان کے اکاؤنٹس منجمد کرنے کے احکامات جاری کرچکی ہے، یو بی ایل تحریری طور ہر مطلع کرچکا ہے کہ حکومت پاکستان کی تقریباً ایک ملین پاؤنڈ کی رقم ضبط کی جاچکی ہے۔اس سے قبل پاکستان دسمبر 2020 میں براڈ شیٹ کو 28ملین ڈالرکی رقم پہلے ہی ادا کرچکا ہے۔

About admin

Check Also

دنیا کی نظروں میں قبضہ مافیاکہلانے والاتاجی کھوکھر درحقیقت ایک کیسا انسان تھا

اسلام آباد(نیوز ڈیسک)اسلام آباد کی معروف کاروباری شخصیت اور سابق رکن قومی اسمبلی حاجی نواز …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *